بستر پر پڑی کسیلی چائے ۔۔۔۔ سمیرا قریشی

bister-per-pari-kasaili-chai-sumera-qureshi

Sumera Qureshi belongs to Dadu, Sindh and is a lecturer in English by profession.  She has become a known poet in the recent years. She expresses herself in poems that combine words with bitter realities.

 

بستر پہ پڑی کسیلی چائے

(سمیرا قریشی)

یہ 
کوئی پہلا چائے کا کپ نہیں ہے
جو میٹھا نہیں ہے
اور 
نہ یہ پہلی بار ہوا کہ
چائے کا ذائقہ کسیلا ہے
اس میں 
چائے کا کوئی قصور نہیں
اور نہ ہی
چائے کی کیتلی ذمہ دار ہے 
چائے میں تیز پتی ڈالنے والوں کی
محبت سے خالی
چائے کی پیالی
بنا کوئی تصویر بنائے
بھاپ اُڑاتی رہتی ہے
بنا پیے رکھی ہوئی چائے
اور 
بنا استعمال کیے محبت
اپنا رنگ اور ذائقہ بر قرار نہیں رکھ پاتی
محبت اور چائے کو
ہمیشہ تازہ رکھنا پڑتا ہے
ورنہ 
محبت کے تھک کے گھر لوٹنے پر 
بستر پہ پڑی 
کسیلی چائےہی پینی پڑتی ہے 

Advertisment

Be the first to comment

Share your Thoughts:

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.