دائرے میں درد کی تصویر ۔۔۔۔ یاسمین حبیب

Yasmin Habib is a published author who writes in Urdu and English language. Yasmin pens poetry as well as short stories. Her poetry is known for its depth and vision and her short stories acclaimed for surreal experimental monologue

غزل

 

( یاسمین حبیب)

نام سے جس کے بدن میں جھرجھری آتی رہی

وقت یہ آیا کہ اس کی یاد بھی جاتی رہی

یوں خزاں کی چیونٹیاں چمٹیں زمیں کی کوکھ سے

فصلِ  گل بے چین تھی راتوں کو چلاتی رہی

ایک نقطے پر ملے احساس کے سب زاویے

دائرہ میں درد کی تصویر لہراتی رہی

اس نظر کی دھوپ کا لکھنا پڑا ہے مرثیہ

عمر بھر جو منجمد سوچوں کو پگھلاتی رہی

منزلِ  شہرِ  تمنا دسترس میں تھی مگر

آرزو کو راستے میں نیند آ جاتی رہی

اس طرح جاڑا کوئی لپٹا رہا کہ عمر بھر

گرم پانی سے بھری بوتل کو سہلاتی رہی

Advertisment

Be the first to comment

Share your Thoughts: