Day: August 10, 2019

One Hundred Years of Solitude … Garcia Marquez

August 10, 2019

GABRIEL GARCIA MARQUEZ was born in Aracataca, Colombia in 1928, but he lived most of his life in Mexico and Europe. He attended the University of Bogota and later worked as staff reporter and film critic for the Colombian newspaper El Espectador. In addition to ONE HUNDRED YEARS OF SOLITUDE, he has also written two […]

Read More

تقدیر ۔۔۔ میخائل شولوخف

August 10, 2019

تقدیر میخائل شولوخف دُوسری جنگِ عظیم ختم ہوئے ایک سال ہوا تھا اور دریائے ڈان کے کنارے موسمِ بہار میں گاڑی لے جانا مشکل ہو گیا تھا کیونکہ مارچ کے آخر میں بحیرہ ازوف کی جانب سے گرم ہوائیں چلتی تھیں اور دریائے ڈان کے کناروں سے برف ہٹا کر انہیں برہنہ کر دیتی تھیں […]

Read More

مِرچاں دے پَتر ۔۔۔ شو کمار بٹالوی

August 10, 2019

مرچاں دے پتر ( شو کمار بٹالوی ) پنیاں دے چن نوں کوئی مسیا کیکن ارگھ چڑھائے وے کیوں کوئی ڈاچی ساگر خاطر ماروتھل چھڈّ جائے وے ۔ کرماں دی مہندی دا سجنا رنگ کویں دسّ چڑھدا وے جے قسمت مرچاں دے پتر پیٹھ تلی ‘تے لائے وے ۔ غم دا موتیا اتر آیا صدق […]

Read More

مکالمہ ۔۔۔ کشور ناہید

August 10, 2019

تخلیق کی تہذیب ۔۔۔۔۔ سیمون اور سارتر کے درمیان ایک مکالمہ ترجمہ: کشور ناہید **************** سیمون نے کہا چلو اب تمھارے فن کی ادبی اور فلسفیانہ حیثیت کے بارے گفتگو کرتے ہیں۔ کیا تم اس بارے میں کچھ کہنا پسند کرو گے۔ سارتر: اب تو اسیے موضوعات پر بات کرنے کو بالکل دل نہیں چاہتا۔ […]

Read More

غزل ۔۔۔ شہناز پروین سحر

August 10, 2019

غزل ( شہناز پروین سحر ) آنسو گرا تو کانچ کا موتی بکھر گیا  پھر صبح تک دوپٹا ستاروں سے بھر گیا میں چنری ڈھونڈھتی رہی اور اتنی دیر میں  دروازے پر کھڑا ہوا اک خواب مر گیا سرما کی چاندنی تھی جوانی گزر گئی  جھلسا رہی ہے دھوپ بڑھاپا ٹھہر گیا میں رفتگاں کی […]

Read More

موت کی تنہائی ۔۔۔ مسعود قمر

August 10, 2019

موت کی تنہائی ( مسعود قمر ) موت کے بعد زندہ رہنا موت کی  اذیت ناک تنہائی پے موت زندگی کی تنہائی سے نجات دلاتی پے مگر موت کی تنہائی سے  نجات کون دلائے گا زندگی کی تنہائی کاہل آدمی کو اتنا مصروف رکھتی پے وہ  موت کی تنہائی کی کوئی نظم پڑھ نہیں پاتا […]

Read More

بُکل ۔۔۔ شاہین کاظمی

August 10, 2019

بُکل شاہین  کاظمی “بھانویں پیراں دے چھالے لہو چون یا اکھیاں ، جد تیکر ساہواں دی ڈور تنڑي ہوئی اے قدماں  نیں ٹردیاں رہنڑا اے ۔ لکھن آلے جنیہاں منزلاں لکھیاں  نیں انہاں نوں جاپنڑا لازم اے۔ صبر تے شکر نال” مائی جی نے تسبیح ایک پاسے رکھی تے کول دھریا پانی دا گلاس منہ […]

Read More

تنہا ایک پرندہ ۔۔۔ سبین علی

August 10, 2019

نظم ( سبین علی ) تنہا ایک پرندہ ہے جو جھوٹ کے ڈھیر سے  سچ کے دانے تلاش کرتا  ہانپ جاتا ہے وہ دانے جو رزق ٹھہریں روح کا  وہ دانے جن پر نام  کربلا میں ڈٹ جانے والوں کا  وہ دانے جو زمیں میں بوئیں تو شجر سایہ دار بنیں وہ دانے جو فلک […]

Read More

تماشائے ہستی ۔۔۔ آیئنہ مثال

August 10, 2019

تماشائے ہستی ( آیئنہ مثال ) فسوں خیزرات دھیرے دھیرے اپنے پر پھیلا رہی تھی کمرے میں خوابناک سا سناٹا چھایا تھا، سانسوں کی موسیقیت کانوں میں رس گھولتی تھی لیکن آج اس موسیقی میں وہ رِدھم نہ تھا، یہ رات شرفو کی ازدواجی زندگی کی انوکھی رات تھی جس میں اس کی محبوب بیوی […]

Read More

ٹال ٹیکس ۔۔۔ ایوب مُصلی

August 10, 2019

ٹال ٹیکس ( ایوب مصلی ) چھترا تاں ویکھو باتشاہو پُتر انج کوئی نہیں جے پالدا پیسے ؟ پیسہ تے بہوں نگھری شئے جے بندے دا بندے نال ورتن ترٹ گیا اے اتے پیسہ پردھان تھیہ گیا اے کیہہ پئے آدھے او او کیہہ بھوکدا ودا ایں ؟ دھوکے بازا ! او راٹھاں دے حلیے […]

Read More
Show Buttons
Hide Buttons
%d bloggers like this: