اب وقت بہت کم ہے ۔۔۔ حمایت علی شاعر

اب وقت بہت کم ہے

حمایت علی شاعر

اب وقت بہت کم ہے
ملنا ہے تو مل جاؤ

تم کو تو خبر ہوگی
ہم عمر کی کس منزل
کس موڑ پر آ پہنچے
اس موڑ پر اکثر دل
مل کر بھی نہیں ملتے
بس دیکھتے رہتے ہیں
بس سوچتے رہتے ہیں
پتھر کی طرح گم سم
اب وقت بہت کم ہے
ملنا ہے تو مل جاؤ

ایسا نہ ہو یہ موسم
یہ عالم بے خوابی
یہ شمع پگھل جائے
اور دیکھتے رہ جائیں
اور سوچتے رہ جائیں
پتھر کی طرح ہم تم

Share your Thoughts:

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Show Buttons
Hide Buttons
%d bloggers like this: