کنفیوژن ۔۔۔ صفیہ حیات

کنفیوزن۔ (وبا کے دنوں میں دھندہ منع ہے)

صفیہ حیات

چاند مٹیالے بادلوں میں کھڑا
سمندر کے نمکین پانی میں جھانک رہاتھا۔
دور کہیں سے کتے بھونکے
بلیوں کے رونے پہ پابندی لگ گئ
کہ
وبا کے دنوں میں
طوائف دھندہ نہیں کرتی۔
۔
چمگادڑیں ایک کانفرنس میں جمع تھیں۔
جب سوءر کا گوشت کھانا عام ہوگیا
سنا ہے
گدھوں نے
بے عزتی کا بہانہ کر کے
بوجھ اٹھانے سے انکا ر کر دیا ہے
۔
جب سے کالی بارش برسی
نوزائیدگان کے دانت ٹوٹ گئے
حرام کاری تیزی سے پھیلی
اب
کالا دھن خون کی ندیوں میں بہتا ہے۔
۔
چارپائی کی ادوائن سے سیاہ ماتمی شلواریں بنیں گیں
وہ بھلا کیسے۔؟
اس کا جواب اگلی صدی میں ملے گا۔
تب تک اپنے عقیدے کی مالا جھپ لو
غیر ملکی قہقہے
جواب کے منتظر ہیں۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Share your Thoughts:

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Show Buttons
Hide Buttons
%d bloggers like this: