ayesha-masood-poetry-aeena-khayal

غزل ۔۔۔ عائشہ مسعود

غزل

(عائشہ مسعود)

آیئنہ خیال میں، وہم و گمان میں رہا

جھونکا ہوا کا دیر تک دل کے مکان میں رہا

گردو غبار سے یہاں کتنے نشان مٹ گئے

لیکن جو بے نشان تھا، نام و نشان میں رہا

زور ہوا سے اڑ کے بھی پہنچے جو آسمان تک

تھوڑی ہی دیر آسماں انکی اڑان میں رہا

رسم و رواج تلخ تھے شکوے شکائتیں بھی تھیں

پھر بھی مگر یہ سلسلہ حرف و بیان میں رہا

لمحہ بہ لمحہ عمر بھر جلتا رہا چراغ اک

یادوں کا اک جہاں تھا ریہ جان میں رہا

Facebook Comments Box

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Calendar

February 2024
M T W T F S S
 1234
567891011
12131415161718
19202122232425
26272829