حیرت کدہ ۔۔۔ ثروت زہرا

حیرت کدہ

( ثروت زہرا )

گریباں سے پہلے یہ گردن،

تو گردن سے پہلے؟!

مہربان مہروں کی خود پر چڑھائی

قلم روشنائی سے پہلے یہ انگلی

تو انگلی سے پہلے رگوں کی ترائی

صداوں سے پہلے دہن ،یہ زباں

اور ان سے بھی پہلے ۔۔

یہ عصبی کڑھائی

تماشے سے پہلے یہ پتلی

سفیدی کی عریاںطنابیں

تو اس سے بھی پہلے

اندھیری لکیروں کی کھائی

سفر !

تجھ سے پہلے قدم

اور اس سے بھی پہلے

ارادوں کی ہیئت کذائی

مرے دل میں تُوتیری خواہش

تری خوا ہشوں سے بھی پہلے

گپھاوں کا باسی تنفس

مرے جینیاتی نظاموں کی پہلی لکھائی

تو پہلے سے،

پہلے سے

پہلے کی کیسی جدائی؟

Read more from Sarwat Zehra

Read more Urdu Poetry

Share your Thoughts:

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Show Buttons
Hide Buttons
%d bloggers like this: